-،-پانامہ کیس فیصلے تک حکومت کو بجٹ سازی سے روکا جائے‘ ایم آر پی-،-
کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) محب وطن روشن پاکستان پارٹی کے قائد و چیئرمین امیر علی پٹی والانے اعلیٰ عدلیہ سے حکمرانوں کو بجٹ سازی سے روکنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ قومی بجٹ آئندہ سال کیلئے قومی ترقی و خوشحالی اور عوامی سہولیات و ذمہ داری کا تعین کرتا ہے اور بجٹ سازی حکومت و حکمرانوں کا کام ہے جبکہ اسلامی جمہوریہ پاکستان کا آئین‘ حکمرانی کیلئے حکمرانوں پر صادق و امین ہونے کی شرط عائد کرتا ہے مگر پانامہ کیس کی عدالت میں موجودگی نے وزیراعظم کی صداقت و امانت پر ایسا سوالیہ نشان کھڑا کردیا ہے جس کا جواب ملنے تک وہ آئین پاکستان کی شرائط کے مطابق حکمرانی کے اہل نہیں رہے اور چونکہ جمہوری نظام میں وزیراعظم حکومت کا سربراہ ہوتا ہے اسلئے جب تک سربراہ کی صداقت و دیانت شکوک و شبہات سے بالاتر نہیں ہوجاتی اس وقت تک حکومت و پارلیمنٹ کو بجٹ سازی اور قوم کے مستقبل کے حوالے سے فیصلوں کا اختیار حاصل نہیں ہے اسلئے اعلیٰ عدلیہ اس حوالے سے نوٹس لیتے ہوئے آئین کا تحفظ کرے اور حکومت کو پانامہ کیس فیصلے تک بجٹ سازی سے روکا جائے ! ،-

Photo (MQJ--KHITAB)