-،-استحصالی طبقہ قوم کو سامراج کے ہاتھوں فروخت کررہا ہے ‘راجونی اتحاد-،-
کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) عوام کو یاد رکھنا چاہئے کہ سانپ کا بچہ بھی سانپ ہی ہوتا ہے اسے کتنا ہی دودھ کیوں نہ پلاؤ اسکی فطرت میں صرف ڈسنا ہی ہوتا ہے اسلئے استحصالی سیاستدانوں و سیاسی جماعتوں کی نئے چہروں کے ذریعے عوام کے گرد پرانا استحصالی رسہ و گھیرا مزید تنگ کرنے کی سازش سے عوام کو ہوشیار رہتے ہوئے آئندہ انتخابات میں شخصیت پرستی ‘ لسانیت ‘ تعصب ‘ مسلک اور جانبداری سے بالاتر ہوکر کردار کی بنیاد پر نمائندوں کا انتخاب کرنا ہوگا کیونکہ پاکستانی قوم کے پاس مستقبل کو محفوظ بنانے کا یہ آخری موقع ہے اور اگر قوم نے اس موقع کو بھی ضائع کردیا تو پھر قرض کی سیاست کے ذریعے ملک وقوم کو گروی رکھنے والا استحصالی طبقہ قوم کوسامراجی قوتوں کے ہاتھوں فروخت کرکے اس کے مقدر میں ہمیشہ کیلئے یہود و ہنود کی غلامی لکھ دیگا ۔ پاکستان راجونی اتحاد میں شامل ایم آر پی چیئرمین امیر پٹی ‘ خاصخیلی رہنما سردار غلام مصطفی خاصخیلی ‘ سولنگی رہنما امیر علی سولنگی ‘راجپوت رہنما عارف راجپوت ‘ ارائیں رہنما اشتیاق ارائیں ‘ مارواڑی رہنما اقبال ٹائیگر مارواڑی ‘ بلوچ رہنما عبدالحکیم رند ‘ میمن رہنما عدنان میمن‘ہیومن رائٹس رہنما امیر علی خواجہ ‘خان آف بدھوڑہ یحییٰ خانجی تنولی فرزند جونا گڑھ اقبال چاند اور این جی پی ایف کے چیئرمین عمران چنگیزی ودیگر نے عوام کو روایتی سیاسی جماعتوں کی نئی چالبازی سے ہوشیار رہنے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ سیاست کو کرپشن کا ذریعہ بناکر دولتمند سے دولتمند ترین ہونے والے عوام کو مزید نوچنے کھسوٹنے کیلئے اپنی اولادوں کو آگے لارہے ہیں اور ہر ایک کی کوشش ہے کہ اس کا بیٹا یا اسکی بیٹی وزیراعظم بن جائے جو اس بات کا ثبوت ہے کہ پرانے شکاری نئے جال سے عوام کو شکار کرنا چاہتے ہیں۔