-،-اقتدار پر ہمیشہ بد دیانت افرادوطبقات قابض رہے ہیں ‘راجونی اتحاد-،-
جے آئی ٹی رپورٹ بتارہی ہے کہ الیکشن کمیشن نے کبھی اپنا آئینی فریضہ دیانتداری سے نہیں نبھایا !
الیکشن کمیشن کے ذمہ دارا ن اثاثے چیک کرائے جائیں اور ان کا بھی احتساب کیا جائے‘ امیر سولنگی

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) پاکستان راجونی اتحاد میں شامل ایم آر پی چیئرمین امیر پٹی ‘ خاصخیلی رہنما سردار غلام مصطفی خاصخیلی ‘ سولنگی رہنما امیر علی سولنگی ‘راجپوت رہنما عارف راجپوت ‘ ارائیں رہنما اشتیاق ارائیں ‘ مارواڑی رہنما اقبال ٹائیگر مارواڑی ‘ بلوچ رہنما عبدالحکیم رند ‘ میمن رہنما عدنان میمن‘ہیومن رائٹس رہنما امیر علی خواجہ ‘خان آف بدھوڑہ یحییٰ خانجی تنولی فرزند جونا گڑھ اقبال چاند اور این جی پی ایف کے چیئرمین عمران چنگیزی ودیگر نے قومی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سپریم کورٹ میں پانامہ کیس کے حوالے سے پیش کردہ جے آئی ٹی کی حتمی رپورٹ نے ثابت کردیا ہے کہ اختیار و اقتدار پر ہمیشہ استحصالی ‘ ظالم ‘بد دیانت ‘ کرپٹ ‘ بے ایمان اور ملک و قوم طبقات و افراد کا قبضہ رہا ہے جس کا ذمہ دار الیکشن کمیشن ہے کیونکہ الیکشن کمیشن کا فریضہ صرف انتخابات کا انعقاد نہیں بلکہ آئین کی شق 62اور 63پر عملدرآمد یقینی بنانااور ملک و قوم دشمن ‘ بد دیانت ‘ کالے کرتوتوں کے حامل ‘ عدالتوں و مطلوب ‘ قرض خور اور بددیانت افراد و طبقات کو انتخابات میں حصہ لینے سے روکنا اور عوام کو اپنی مرضی کی قیادت کے انتخاب کیلئے منصفانہ‘ شفا ف اور پر امن ماحول فراہم کرنا بھی الیکشن کمیشن کی ذمہ داری ہے مگر جے آئی ٹی رپورٹ نے ثابت کردیا ہے کہ الیکشن کمیشن نے کبھی اپنی یہ ذمہ داری نہیں نبھائی اسلئے ضیائی آمریت کے بعد سے قائم ہونے والی تمام جمہوریتوں کیلئے کرائے جانے والے انتخابات کے دوران الیکشن کمیشن طاقتورعہدوں پر فائز رہنے والے تمام افراد کیخلاف مقدمات قائم کرکے ان کے اثاثے چیک کرائے جائیں اور ان کا بھی احتساب کیا جائے ۔