-،-مسجد اقصیٰ میں بھی فلسطینی محفوظ نہیں ۔محمدناصراقبال خان-،-
مسلم حکمران کہاں ہیں۔سعیدکھوکھر،رضاایڈووکیٹ ،رانابشارت،روحی کھوکھر

ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان،چیف آرگنائزر میاں محمدسعید کھوکھرایڈووکیٹ، سیکرٹری جنرل محمدرضاایڈووکیٹ،صدربرطانیہ رانابشارت علی خاں ،سینئر نائب صدور میاں محمداشرف عاصمی ایڈووکیٹ، ندیم اشرف ،روحی بانوکوکھرایڈووکیٹ ،سلمان پرویز ،مرکزی نائب صدور ناصرچوہان ایڈووکیٹ، ممتاز حیدر اعوان ،محمدشاہدمحمود ،صدر پنجاب محمدیونس ملک،نائب صدرشبیرحسین ،صدرنیویارک محمد جمیل گوندل، صدر مدینہ منورہ سرفرازخان نیازی،صدرکراچی یونس میمن ،صدر چنیوٹ راناشہزادٹیپو ،صدرفیصل آبادندیم مصطفی ،صدرٹیکسلا سردارمنیر اختراور صدر قصور میاں اویس علی نے کہا ہے کہ مسجد اقصیٰ میں بھی فلسطینی محفوظ نہیں۔مسجد اقصیٰ میں اذان اورنماز پرغیرمعینہ مدت تک پابندی ناقابل برداشت ہے۔صہیونی اوربھارتی درندوں کومسلمانوں کی مذہبی آزادی پرشب خون مارنے کاحق کس نے دیا،کیا اقوام متحدہ کے ضابطہ اخلاق کااطلاق صرف مسلمانوں پرہوتا ہے ۔مسلمانوں کے قبلہ اول کے تقدس جبکہ فلسطینیوں کے بنیادی حقوق کی پامالی پرعالمی ضمیرآوازکیوں نہیں اٹھاتا ۔مسلم حکمران اپنی مجرمانہ خاموشی اوربزدلی کا روزمحشر اللہ تعالیٰ کوکیاجواب دینگے ۔ وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔محمدناصراقبال خان اورمیاں محمدسعیدکھوکھرنے مزید کہا کہ فلسطینی عوام کوشاہراہوں پرنماز جمعہ اداکرنے پرمجبورکردیا گیا ،اس کے باوجودنمازیوں پربہیمانہ تشددکیا گیا ۔مفتی اعظم بیت المقدس الشیخ محمدحسین اورامام قبلہ اول سمیت ہزاروں گرفتارفلسطینیوں کوفوری رہاکیاجائے۔انہوں نے کہا کہ اسرائیل کے قیدخانے فلسطینیوں کیلئے عقوبت خانے ہیں،جہاں انہیں زندہ درگورکردیاجاتا ہے۔انسانی حقوق کے علمبردار اسرائیل اوربھارت کامحاسبہ کریں کیونکہ ان کی شیطانیت امن وآشتی اورانسانیت کیلئے خطرہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ فلسطینیوں سے کشمیریوں تک بیگناہ مسلمانوں کاخون بہایاجارہا ہے ۔معصوم مسلمانوں کے خون سے ہولی کھیلنے والے درندے آپس میں اتحادی ہیں۔انہوں نے کہا کہ نریندرمودی کے حالیہ دورہ اسرائیل کاخفیہ ایجنڈا بے نقاب ہوگیا ۔اسلام اورمسلمانوں پر حملے کرناکفار کی فطرت ہے ،ان کے ساتھ ساتھ بے حس مسلم حکمران بھی قابل نفرت اورقابل مذمت ہیں جوظالم کاہاتھ اورظلم کاراستہ نہیں روکتے۔انہوں نے کہا کہ مغرب کو جانوروں کے حقوق کی پامالی برداشت نہیں لیکن مسلمانوں کے حقوق روندنے والے درندے مغربی معاشرے کاسرمایہ افتخار ہیں۔مسلمانوں بارے مغرب کی منافقت اورمتعصبانہ روش دنیا کوتصادم کے دہانے تک لے آئی ہے۔