-،-پرویز مشرف اورمحمدکامران میاں کے درمیان دبئی میں ملاقات-،-
دونوں رہنماؤں نے آئندہ قومی سیاست میں مشترکہ حکمت عملی اپنانے پر غورکیا

اے پی ایم ایل کے مرکزی چیئرمین،سابق صدرمملکت اورپاک فوج کے سابق سپہ سالار جنرل (ر) پرویز مشرف اورمووآن پاکستان کے مرکزی چیئرمین محمدکامران میاں کے درمیان دبئی میں تین گھنٹے ون آ ن ون ملاقا ت ہوئی ،دونوں رہنماؤں کے درمیان پاناما کیس بارے عدالتی فیصلے کے تناظر میں پاکستان کی تازہ سیاسی صورتحال،انتخابی اصلاحات، اپوزیشن پارٹیوں کے ممکنہ گرینڈ الائنس،انتخابی اتحاداورسیٹ ایڈجسٹمنٹ پر سیرحاصل گفتگو ہوئی ۔پرویز مشرف اورمحمدکامران میاں نے پاکستان میں احتساب شروع ہونے جبکہ عدالت عظمیٰ کے حالیہ تاریخی فیصلے پراطمینان کااظہارکرتے ہوئے مزید بدعنوان عناصر کے بے رحم احتساب پرزوردیا ۔پرویز مشرف اورمحمدکامران میاں نے آئندہ قومی سیاست میں مشترکہ حکمت عملی اپنانے پربھی غورکیا ۔رہنماؤں نے کہا کہ باریاں مقررکرکے اقتدارمیں آنیوالی دونوں پارٹیوں کاراستہ روکنے کیلئے ہم خیال سیاسی رہنماؤ ں کوآپس میں سرجوڑکربیٹھنا ہوگا۔ پرویز مشرف نے مووآن پاکستان کی سیاسی اوربالخصوص فروغ تعلیم کیلئے صحتمندسرگرمیوں کو سراہا ۔محمدکامران میاں نے پرویز مشرف کیخلاف مختلف انتقامی مقدمات اوران کیخلاف میڈیا پرگہری تشویش کااظہار کرتے ہوئے ان مقدمات اوراس مجرمانہ روش کوختم کرنے کامطالبہ کیا ۔ دونوں رہنماؤں کے درمیان عنقریب دوبارہ ملاقات ہوگی اورانتخابی اتحادسمیت سیٹ ایڈجسٹمنٹ کاجائزہ لیاجائے گا۔

mu

-،-پرویز مشرف اورمحمدکامران میاں کے درمیان دبئی میں ملاقات-،-