-،-برمانے بربریت میں بھارت کوبھی پیچھے چھوڑدیا۔رانابشارت -،-
اقوام متحدہ کشمیر ،فلسطین اوربرمامیں مسلمانوں کی مسلسل نسل کشی روکے

ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل برطانیہ کے صدرانا بشارت علی خاں نے کہا ہے کہ برمانے بربریت میں بھارت کوبھی پیچھے چھوڑدیا۔برمامیں مسلمانوں پربدترین تشدد کے دلخراش مناظر تصاویراورویڈیوزکی صورت میں سوشل میڈیاپردیکھے جاسکتے ہیں۔برماکے بدنصیب مسلمان بنیادی شہری اور انسانی حقوق سے محروم اور حیوانوں سے بدتر زندگی گزاررہے ہیں۔اقوام متحدہ جموں وکشمیر ،فلسطین اوربرمامیں مسلمانوں کی مسلسل نسل کشی روکنے کیلئے موثرانداز سے آوازاٹھائے اوراپنااثرورسوخ استعمال کرے ۔کیا اقوام متحدہ کے ضابطہ اخلاق کااطلاق صرف مسلمانوں پرہوتا ہے جبکہ برما،اسرائیل اوربھارت کے حکمران آزادانہ اس ضابطہ اخلاق کی دھجیاں بکھیررہے ہیں۔ بربریت سہنا اورخاموش رہنا مسلمانوں کامقدرنہیں ہوسکتا،مقتدرقوتوں کوآگے آناہوگا۔وہ ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے ۔رانا بشارت علی خاں نے مزید کہا کہ مسلمان مسلسل تشدد اورتعصب کانشانہ بن رہے ہیں مگر مقتدرقوتوں کی زبان بند ہے ۔اسلام اورمسلمانوں کے حوالے امریکہ اوریورپ کے ڈبل سٹینڈرڈ باربارایکسپوزہورہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ انسانی حقوق بارے اپنے مخصوص ونگ کومزید منظم اورمتحرک کرے ورنہ مذاہب کے درمیان نفرت کی دیوارمزید بلندہوجائے گی ۔اِسلام بارے بے بنیاد غلط فہمیاں دورکرنے کیلئے اقوام متحدہ کوسنجیدہ اوردوررس اقدامات اٹھاناہوں گے ۔انہوں نے کہا کہ اسلام ہررنگ ونسل کے انسانوں کیلئے کامل ضابطہ حیات اور امن وسلامتی کاعلمبردار ہے ،دنیاکاکوئی فردیاطبقہ اس کی تعلیمات کامطالعہ کئے بغیر اس پرتنقید یامنفی رائے قائم کرنے کاحق نہیں رکھتا۔دنیا کوامن وآشتی کاگہوارہ بنانے کیلئے مسلمانوں کی قربانیوں اورسنجیدہ کاوشوں سے کوئی قوم انکار نہیں کرسکتی ۔انہوں نے کہا کہ اسلام کوکمزورکیاجاسکتا ہے اورنہ مقتدرقوتیں مسلمانوں کادیوار سے لگاسکتی ہیں۔