-،-عام آدمی کی خودکفالت سے معیشت مضبوط ہوگی۔ دانش ملک-،-
پاکستان اوورسیز کی ممتاز سماجی ،کاروباری شخصیت اور بینکار دانش ملک نے کہا ہے کہ عام آدمی کی خودکفالت سے معیشت مضبوط ہوگی۔شہری ریاست پرانحصار کریں یہ ترقی نہیں بلکہ ترقی وخوشحالی شہریوں پر ریاست کے انحصار کانام ہے۔شہریوں کی مختلف کاروباری سرگرمیوں میں دلچسپی پیداکرنے کیلئے ان کی تربیت کے ساتھ ساتھ حوصلہ افزائی بھی کی جائے۔شہریوں کو خودکفیل بنانے سے کئی خاندانوں کامعیار زندگی بلندہوتا ہے ۔ ہوم انڈسٹری کے فروغ سے قومی سطح پرمعاشی سرگرمیوں کو تقویت ملے گی۔پاکستان کے نجی وسرکاری تعلیمی اداروں میں وہ تعلیم دی جائے جس کے بعد پریکٹیکل زندگی کے دوران ہمارے نوجوان طلبہ وطالبات میں سے کوئی بھی ریاست پربوجھ نہ بنے بلکہ وہ اپنااوراپنے عزیزواقارب کابوجھ باآسانی اٹھاسکیں۔ہمارے ملک میں ہرکسی کے پاس کئی کئی ڈگریاں ہیں مگرباعزت روزگار صرف نصیب والے کوملتا ہے ۔ وہ مختلف وفود سے بات چیت کررہے تھے ۔ دانش ملک نے مزید کہا ہے کہ کاروباری سوچ کے حامل شہریوں کوآسان شرطوں پرقرض کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔پاکستان میں مائیکروفنانس شعبہ کومزید متحرک اورمنظم کرنے کی اشد ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ جہاں سرمایہ گردش میں رہتا ہے وہاں معاشرے کے سبھی طبقات معاشی ترقی سے مستفیدہوتے ہیں۔شہریوں کوپسماندہ رکھناسرمایہ داروں کے اپنے نقصان میں ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگرخدانخواستہ عوام کی قوت خریدختم ہوگئی تومعاشی نظام دھڑام سے زمین بوس ہوجائے گا۔پاکستان میں مائیکروفنانس کے نظام کو بہت زیادہ پیچیدہ بنادیاگیا ہے،زیادہ ترلوگ سخت شرطوں کے ڈر سے بنکوں کارخ نہیں کرتے جبکہ ملازمت کے انتظارمیں اس کیلئے مخصوص عمرکی معیاد بھی ختم ہوجاتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ صارف خوشحال ہوگا تویقیناًمصنوعات فروخت ہوں گی۔ہرملک کے پاس ملازمت کے مواقع محدودہوتے ہیں لیکن کاروبار کرنے کی ہرکسی کوآزادی ہے ۔