۔،۔بھارتی سپریم کورٹ نے لاعلاج مریضوں کے لئے ہمدرددانہ موت کی اجازت دے دی۔،۔

نئی دہلی بھارتی سپریم کورٹ نے لاعلاج مریضوں کو پانونی طور پر اجازت دے دی کہ مریض تکلیف دہ زندگی گزارنے کی بجائے اپنی مرضی سے اپنے لئے ،، ہمدردانہ موت،، موت کا فیصلہ کر سکتے ہیں۔

شان پاکستان بھارت نئی دہلی۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بھارتی سپریم کورٹ نے تکلیف دہ موت کے دہانے پر کھڑے لاعلاج مریضوں کو کرب ناک صورت حال سے بچانے کے لئے ہمدردانہ طبی موت دینے کی اجازت دے دی ہے، سپریم کورٹ کے فیصلہ کے مطابق ناقابل علاج مریضوں کو تکلیف دہ طبی مراحل سے گزرنے کی بجائے اپنی مرضی سے طبی امداد ختم کر کے موت کو گلے لگانے کی وصیت کو بھی قانونی حیثیت دے دی ہے، طبی اصطلاح میں اس رد عمل کو Passive Euthanasia جبکہ اردو میں ،، بالراست موت،، بھی کہا جا سکتا ہے۔

Supreme_courtofIndia