۔،۔بھارتی شہری مردہ ماں کو 3سال فریج میں رکھ کر پینشن وصول کرتا رہا۔،۔
مردہ ماں کو تین سال تک فریج میں رکھ کر سرکاری پینشن وصول کرنے والے بیٹے کو بھارتی پولیس نے گرفتار کر کے عدالت میں پیش کر دیا۔

بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بھارتی پولیس نے جمعہ کی شب کو ہزرا تاما جمدار نامی شخص کو گلکتہ سے گرفتار کر لیا، اطلاع کے مطابق جمدار نے اپنی مری ہوئی ماں کو گذشتہ 3سالوں سے فریج میں رکھا ہوا تھا ،پولیس نے تین سال پرانی لاش بر آمد کر لی،ملزم گذشتہ تین سال سے اپنی مردہ ماں کے انگوٹھے کا نشان لگوا کر سرکاری پینشن Pensionوصول کر رہا تھا ، تاہم مسلسل غیر حاضری پر بینک نے شک کا اظہار کرتے ہوئے مقامی پولیس کو اطلاع دی تھی، تفتیش کے دوران ملزم نے پولیس آفیسرز کو معصومانہ بیان دیتے ہوئے کہا کہ میری ماں ایک نہ ایک دن خود بخود زندہ ہو جائے گی اسی لئے میں نے اپنی ماں کی لاش فریزر میں محفوظ کر لی تھی ، اسی بہانے ملزم ہر مہینہ مردہ ماں کی ماہانہ تیس ہزار روپے پینشن وصول کرتا رہا۔ ڈپٹی کمشنر نے عدالت کو بیان دیتے ہوئے کہا کہ ملزم چمڑا بنانے کا ماہر ہے اور مقامی فیکٹری میں بطور ۔لیدر ٹیکنالوجسٹ۔leder technologist کا کام کرتا ہے اسی لئے مردہ ماں کے اندرونی اعضاء نکال کر جسم کو کیمیکل لگا کر محفوظ کیا ہوا تھا۔ملزم نے لاش کو حنوط کرنے کے مکمل عمل کو نیشنل جیو گروافک کے ایک پروگرام سے سیکھا تھا۔

tc