۔،۔ آسٹریامیں مساجد کی بندش ناقابل فہم ہے۔محمدناصراقبال خان۔،۔
اسلام سے انتقام لیا گیا۔محمدسعیدکھوکھر ،محمد رضاایڈووکیٹ ، سرفرازنیازی، رانابشارت

ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان،چیف آرگنائزر میاں محمدسعید کھوکھرایڈووکیٹ ، سیکرٹری جنرل محمدرضاایڈووکیٹ ،سینئر نائب صدورتنویرخان، محمداشرف عاصمی ایڈووکیٹ، ندیم اشرف ،سلمان پرویز ،مرکزی نائب صدور اخترعلی بدر، ناصرچوہان ایڈووکیٹ ، ممتازاعوان ،محمدشاہدمحمود ،صدر پنجاب محمدیونس ملک،صدربرطانیہ رانابشارت علی خاں ، صدر مدینہ منورہ سرفرازخان نیازی،صدرکراچی یونس میمن ،صدر چنیوٹ راناشہزادٹیپو ،صدرفیصل آبادندیم مصطفی،صدرٹیکسلا سردارمنیر اختر اور صدر قصور میاں اویس علی نے کہا ہے کہ آسٹریامیں مساجد کی بندش ناقابل فہم ہے،اس قسم کے منفی ہتھکنڈوں سے اسلام کاعلم مزید بلند گا۔آسٹریاحکومت کے اس متنازعہ اقدام کی آڑمیں اسلام سے انتقام لیا گیا ، حکومت اپناآمرانہ فیصلہ واپس لے۔اگرآسٹریامیں مقیم کسی مسلمان سے کوئی قانون شکنی ہوگئی ہے تواس کی سزادین فطرت اسلام کونہیں دی جاسکتی۔اسلام ایک زندہ حقیقت ہے ،جس سے انکار نہیں کیاجاسکتا۔دنیا کے کچھ ملک مسلمانوں کوہراساں اوران کاقتل عام کرکے اسلام کاوجودختم نہیں کرسکتے، دوسرے مذاہب کی طرح اسلام کا بھی دلی احترام کیاجائے ۔ عالمی ضمیر اسلام دشمن اقدامات روکنے کیلئے اپناکرداراداکرے کیونکہ انسانیت تعصبات اور نفرت کی متحمل نہیں ہوسکتی ۔اسلام خیروسلامتی کاداعی ہے ،آسٹریاحکومت کااسلام بارے تعصب ناقابل برداشت ہے۔وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔محمدناصراقبال خان، میاں محمدسعید کھوکھرایڈووکیٹ اور محمدرضاایڈووکیٹ نے مزید کہا کہ آسٹریاحکومت مسلمانوں کی مذہبی آزادی سلب نہیں کرسکتی ، دوسری اقلیتوں کی طرح اپنے عقیدہ کے مطابق آزادانہ عبادت کرنا آسٹریامیں مقیم مسلمانوں کابنیادی حق ہے ۔آسٹریاحکومت مسلمانوں کوان کے بنیادی حق سے محروم نہ کرے ۔انہوں نے کہا کہ قانون قدرت کے مطابق جس شے کوزیادہ دبایاجائے وہ زیادہ ابھرتی ہے۔ اسلام کیخلاف بدترین تعصب اورتشدد کے باوجود دنیابھرمیں لوگ دائرہ اسلام میں داخل ہورہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اسلام کسی کیلئے خطرہ نہیں بلکہ ہرانسان کیلئے امان ہے ۔اسلام دنیا بھر کیلئے امن وآشتی کاداعی ہے ،اسلام کی تعلیم کے بغیر اس پرتنقید جائزہے اورنہ کسی کے پاس ا یساکرنے کاکوئی جواز ہے۔انہوں نے کہا کہ سکون کی تلاش میں اسلام کامطالعہ کر نیوالے جوق درجوق دائرہ اسلام میں داخل ہو رہے ہیں۔آسٹریاسمیت کوئی ریاست مساجدکی بندش سے اسلام کا ابلاغ بند نہیں کرسکتی ۔