۔،۔ امریکی ریاست وسکونسن میں آیا نے 2ماہ کا بچہ قتل کر کے لاش ماں کے حوالہ کر دی۔،۔

شان پاکستان وسکونسن ۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق امریکی ریاست وسکونسن Wisconsinمیں 28سالہ مارساٹا ئٹسوٹ (آیا) نے 2ماہ کے بچے کو جان بوجھ کر قتل کیا ۔بچے کی ماں کی جانب سے شکایت درج کرائی گئی کہ 28 سالہ مارسا ٹائٹسورٹ نے اکتوبرمیں اس کے 2 ماہ کے بچے کوقتل کیا، ماں نے الزام لگایا کہ جب وہ اپنے بچے کو آیا کے پاس دیکھ بھال کے لیے چھوڑ کرگئی تو 2 گھنٹے بعد آیا نے موبائل پر رابطہ کیا اور پیغام بھیجا کہ وہ کسی کو نہ بتائے کہ میں بچے کی دیکھ بھال کررہی ہوں کیونکہ ایک ویب سائیٹ نے میرے متعلق ایک خبرچھاپی ہے جس میں مجھ پر پہلے ہی بچوں کے ساتھ بد سلوکی کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ماں جب اپنے بچے کو واپس لینے آئی تواس نے دیکھا کہ اس کا 2 ماہ کا بچہ آیا کی گاڑی میں موجود تھا جس کے منہ پرایک ہیٹ تھا اوراسے سردی سے بچاؤ کے لیے گرم کپڑے پہنائے ہوئے تھے، ماں سمجھی کہ بچہ سورہا ہے تاہم کچھ دیربعد ماں نے محسوس کیا کہ بچہ سانس ہی نہیں لے رہا تو وہ گھبرا گئی اور پھرمزید غورسے دیکھنے پراسے پتہ چلا کہ اس کے بچے کے ہونٹ نیلے پڑے ہوئے تھے اوراس کے سر پربھی چوٹیں تھیں، جو یہ ظاہر کررہا تھا کہ بچہ کئی گھنٹے پہلے ہی دم توڑ چکا تھا۔اس حوالے سے آیا نے پولیس کو بتایا کہ اسے معلوم تھا کہ بچہ مرچکا ہے لیکن اس کا بچے کے قتل سے کوئی لینا دینا نہیں تاہم پولیس اس حوالے سے تحقیقات کررہی ہے۔واضح رہے کہ 28 سالہ آیا ٹائٹسورٹ چھٹی بار حاملہ ہے اور اس پر11 سالہ بچی کے ساتھ بھی برے رویہ اختیار کرنے کے الزامات عائد کیے گئے تھے۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے