۔،۔کیتھولک گروپ نے المدینہ مسجد سٹٹگارٹ کا معلوماتی دورہ کیا۔جاوید اقبال بھٹی۔،۔

جاوید بھٹی شان پاکستان سٹٹگارٹ۔ المدینہ مسجد کے قریب کیتھولک چرچ Catholic Church سے تعلق رکھنے والی کرسچین کمیونٹیChristian Community نے سٹٹگارٹStuttgart میں موجود پاکستانی مسجد المدینہ کا دورہ کیا، خطیب مسجد مولانا شوکت مدنی نے ان کے کئے گئے سولات کا بہت خوبصورتی سے جواب دیا، ان کا فرمانا تھا کہ اللہ تعالی ہم سے کہتے ہیں کہ زندگی گزارنے کا ایک طریقہ ہے جس کا نام ہے اسلام، اسلام کیا ہے وہ انہوں نے پیارے انداز میں حدیث نبویﷺ کو مد نظر رکھتے ہوئے فرمایا، ایک صحابی حضور کی خدمت میں تشریف لائے اور عرض کی اسلام کیا ہے تو آپ نے فرمایا۔اسلام یہ ہے کہ تو توحید اور رسالت کی گواہی دے،پھر نماز قائم کر، زکواۃ ادا کر، روزہ رکھاور حج کر۔ اس کے ساتھ ہی ساتھ سمجھانے کے لئے ایک اور حدیث پیش کی۔اسلام کی بنیاد پانچ چیزیں ہیں، ان کا کہنا تھا کہ اللہ کے نبی نے اسلام کو ایک گھر کے ساتھ تشبیع دی ہے۔گھر شروع ہوتا ہے بنیادوں سے جس کے لئے زمین میں کھدائی ہوتی ہے پھر بنیادیں بھری جاتی ہیں اگر بنیاد نہ بھری ہو تو گھر قائم نہیں ہو سکتا،اگر بنیادوں کے بغیر گھر بنے گا تو گِر جائے گا ہاں اگر بنیاد ہو گی تو کچی اینٹوں پر بھی کھڑا ہو جائے گا،نبی پاک ﷺ نے فرمایا اسلام کی بنیاد پانچ چیزیں ہیں ٭ توحید اور رسالت کی گواہی،پھر نماز قائم کرو، زکواۃ ادا کرو، روزہ ر اور حج ادا کرو٭اگر اسلام کو زندگی میں لانا چاہتے ہو تو بنیاد بھرو۔ ایمان میں اللہ تعالی کی توحید ہے جو کچھ ہے اللہ کی طفیل ہے،اللہ نہ ہو تو کچھ نہ ہو بالکل ایسے ہی کہ اگر آپ ایک کاپی پر صرف (00000000)لکھ کر کاپی کو بھر دیں تو آپ نے کیا لکھا یقیناََ کچھ بھی نہیں لکھا،اس کے بعد پہلے صفرکے ساتھ ایک(۱) لگا دیں،آپ نے بہت بڑا عدد لکھ دیا ایسا کرنے سے ہر صفر دوسرے کو طاقت پہنچاتا جائے گا بالکل ایسے ہی ایک صفر کو (۱)10))پھر (100)کس کی طفیل ایک (۱) کے طفیل۔ایسے ہی دنیا میں جو کچھ ہے اس اللہ کی ایک اکائی کی وجہ سے ہے اگر اللہ اپنے امر کو پیچھے لے لے تو یہ دنیا صرف اور صرف صِفر ہے۔ اور یہی مطالبہ لا الا۔پہلے ایمان بناو پھر اس سے تعلق جوڑو نماز کے ذریعہ ایمان کا دوسرا حصّہ ہے رسول اللہ آپ کا اتباہ ہر ادا کو ڈھونڈ کر نقل کرنا، اللہ کہتا ہے اس کی نقل اتارو میں تمہیں پاس کر دوں گا۔اس کی ہر ادا کو اللہ نے قیامت تک محفوظ کر دیا ہے۔ اگر آپ سے کوئی ہاتھ ملاتا تھا تو وہ چھوڑتا تھا آپ جان بوجھ کر ہاتھ نہیں چھڑاتے تھے بغرضیکہ آنے والے کرسچینChristian مہمان ان کی باتوں سے محفوظ ہوئے، انتظامیہ اور مسجد میں موجود افراد سے ساتھ انہوں نے ریفریشمنٹ refreshment کی ان کا شکریہ ادا کیا۔ کمیونٹی کے صدر کا کہنا تھا کہ یہ معلوماتی ملاپ بہت ہی خوشگوار ماحول میں اپنے اختتام کو پہنچا۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے