۔،۔ دو بڑوں کی بڑی بیٹھک‘ تحریک جونا گڑھ کی فعالیت کا فیصلہ۔،۔
جونا گڑھ کی عوام کو متحدو یکجا کرینگے اور انہیں ان کے تمام آئینی حقوق دلائینگے‘ گجراتی سرکار اور فاروق کمال کا عزم
جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن کے وفد کی گجراتی قومی موومنٹ کے سربراہ سے ملاقات‘ مستقل کے لائحہ عمل پر گفتگو

کراچی (اسٹاف رپورٹر)جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن کے سابق صدر فاروق کمال نے گجراتی قومی موومنٹ کے چیئرمین گجراتی سرکار عرفان سولنگی عرف پٹی والا سے ان کی رہائشگاہ پر ملاقات کرکے امیر علی پٹی والا مرحوم کی سیاسی و سماجی اور کمیونٹی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ امیر علی پٹی والا مرحوم نظریاتی‘ دیانتدار‘ مخلص‘ خدا ترس اور سخی انسان تھے اور ان کی سیاست کا محور و مرکز خد مت انسانیت تھی یہی وجہ تھی کہ زندگی کے 72برس سیاست سے وابستہ رہنے کے باجود انہوں نے کبھی کسی سرکاری عہدے یا مرتبے کی خواہش نہیں کی اور ہمیشہ انسانیت کی فلاح و بہبود کیلئے کام کرتے رہے جبکہ جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن کے تمام دھڑوں کو متحد کرکے جونا گڑھ کے عوام کے آئینی حقوق کے حصول اور مصائب و مشکلات کے خاتمہ کیلئے ان کی جدوجہد لازوال و بے مثالی تھی جس کا شعور نہ صرف جونا گڑھ سے تعلق رکھنے والے ہر فرد کو ہے بلکہ نواب آف جونا گڑھ ہزہائی نیس نواب جہانگیر خانجی بھی بارہا او ر کئی مواقع پر اس کا اعتراف کرچکے ہیں۔ اس موقع پر فاروق کمال کی سربراہی میں گجراتی سرکار عرفان سولنگی عرف پٹی والا سے ملاقات کیلئے آنے والے وفد میں شامل جونا گڑھ فیڈریشن کے صدر سید محمد صدیق باپو‘ جنرل سیکریٹری محمد سلیم لودھی‘ فائنانس سیکریٹری محمد یاسین خان ایڈوکیٹ‘ آفس سیکریٹری مصطفی خان‘ ممبر مجلس عاملہ حنیف دربار‘ الطاف حسین دربار‘ عبدالوقار‘ سید یاسر علی شا ہ و دیگر نے امیر علی پٹی والا مرحوم کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے ان کے صاحبزادے عرفان پٹی والا سے استدعا کی کہ وہ اپنے والد مرحوم کے ادھورے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچائیں اور سیاسی و سماجی خدمات کی ادائیگی کیساتھ جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن میں موجود دھڑے بندیوں کے خاتمے‘ جونا گڑھ کے عوام کو ان کے آئینی حقوق دلانے اور جونا گڑھ سے تعلق رکھنے والوں کی مسائل‘ مصائب وتکالیف کو حل کرانے کیلئے بھی اپنا محبانہ اور ذمہ دارانہ کردار ادا کریں۔ اس موقع پر عرفا ن پٹی والا نے سابق صدر جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن اور ان کی سربراہی میں ملاقات کیلئے آنے والے وفد کے اراکین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میں نے اپنے والد کی ذمہ داریوں کیساتھ ان کے مقاصد کی تکمیل کا حلف بھی اٹھایا ہے اسلئے نہ صرف سیاسی و سماجی سطح پر مصروف عمل ہوں بلکہ جونا گڑھ کے عوام‘ جماعتوں‘ فیڈریشن کے تمام دھڑوں‘ جونا گڑھ ہاؤس اور نواب آف جونا گڑھ ہزہائی نیس نواب جہانگیر خانجی سے بھی مسلسل و مستقل رابطہ میں ہوں اور انشاء اللہ وہ وقت دور نہیں جب فیڈریشن میں دھڑے بندیوں کے ذریعے جونا گڑھ کے عوام اور نواب آف جونا گڑھ کی عزت و وقار کو نقصان پہنچانے والوں کو شکست فاش ہوگی اوروہ اپنے منطقی انجام کو پہنچیں گے جبکہ جونا گڑھ اسٹیٹ مسلم فیڈریشن حقیقی معنوں میں جونا گڑھ کے عوام کی فلاح و بہبود کے مثالی ادارے کا کردار ادا کرے گی مگر اس کیلئے ضرورت اتحادو اتفاق اور منافقت سے پاک مخلصانہ کردار کی ہے جس کیلئے میں فارو ق کمال کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں کیونکہ ان کا کردار و عمل ہمیشہ مشفقانہ ہی نہیں بلکہ مخلصانہ اور ذمہ دارانہ بھی رہا ہے یہی وجہ ہے کہ جونا گڑھ کے عوام ان سے محبت اور ان پر اعتماد کرتے ہیں!

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے