۔،۔اندھیری رات،برف باری، اکیلی لڑکی اور سڑک پر ڈانس؟۔،۔

شان پاکستان مری۔ سنسان سڑک، برف باری اس میں اکیلی لڑکی کا سڑک پر ڈانس سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہونے پر پورے پاکستان میں چہ میگوئیاں اور شدید تنقید کا نشانہ کچھ لوگ لڑکی کے اس طرح سر عام ڈانس کرنے پر غصّے کا اظہار کر رہے ہیں ان کا کہنا ہے کہ ایسی ہی لڑکیاں سر پکڑ کر کہتی ہیں ہمیں ہراساں کیا جاتا ہے، گھر میں گھس کر چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کیا جاتا ہے جبکہ دوسری طرف کچھ ٹوئٹس لڑکی کے حق میں بھی ظاہر ہوئے ہیں جس میں لوگوں کا کہنا ہے کہ جب ڈانس کرنے پر لڑکی کو کوئی مسئلہ نہیں،اس کے والدین مطمئن ہیں انہیں بھی کوئی مسئلہ نہیں لڑکی نے پورے کپڑے پہنے ہوئے ہیں ڈانس میں کوئی بیہودگی نہیں اسلامی جمہوریہ پاکستان میں سب کو اپنی مرضی سے زندگی بسر کرنے کا پورا حق ہے، اسلامی جمہوریہ پاکستان میں اپنی مرضی سے زندگی انجاوائے کرنے کا حق دیتا ہے تو دیکھنے اور لکھنے والے اس کا والد اور والدہ نہ بنیں۔ ایک لڑے نے لکھا ہے لڑکی کے ڈانس کرنے پر اعتراض کیوں جب لڑکے ڈانس کرتے ہیں تو اس پر کسی کا احساس یا ضمیر کیوں نہیں جاگتا اگر لڑکی نے ڈانس کر لیا تو ہر کوئی مفتی بن کر فتوے جاری کرنے لگتا ہے۔ بعض لوگوں کا اعتراض ڈانس پر نہیں ان کا کہنا ہے کہ ہر بات پر اسلامی جمہوریہ پاکستان لکھ کر ملک کو کیوں بدنام کیا جاتا ہے۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے