۔،۔ ایف اے ٹی ایف سے بلیک لسٹ ہونے پر ایران کا دبنگ اعلان۔عباس موساوی۔،۔

شان پاکستان ایران تہران۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق جمہوری اسلامیہ ایران دفتر خارجہ کے ترجمان عباس موساوی کا کہنا تھا کہ ایران نے منی لانڈرنگ اور دہشتگردی کی مالی معاونت روکنے کے حوالہ سے گذشتہ دو سالوں کے دوران تمام تر متعلقہ قوانین و ضوابط کی پابندی اور ان کا نفاذ یقینی بنایا، ان کا مزید کہنا تھا کہ تمام معاملات کی بہتری کی کوششوں کے باوجود ایف اے ٹی ایفFinancial Action Task Force on Money Launderinمنی لانڈرنگ فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی جانب سے بلیک لسٹ کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ صہیونی حکمرانی ایک دہشتگرد ریاست ہے جو دنیا بھر میں تمام دہشتگرد گروپوں اور تنظیموں کو تعاون فراہم کرتے ہیں تاہم انہوں نے تمام تعاون اور شفافیت کے باوجود ایران کو بلیک لسٹ کر دیا۔انہوں نے کہا کہ ایران پر کبھی منی لانڈرنگ اور دہشتگردوں کی مالی معاونت کا لیبل نہیں لگایا جا سکتا۔ دوسری جانب ایران کے مرکزی بینک کے سربراہ عبدالناصر ہمتی نے کہا کہ ایف اے ٹی ایف کا فیصلہ سیاسی ہے اور اس کے ایران کی غیر ملکی تجارت پر کوئی اثرات مرتب نہیں ہونگے۔خیال رہے ایف اے ٹی ایف کی پابندی ایسے وقت پر سامنے آئی ہیں جب ایران میں پارلیمانی انتخابات کا عمل آج مکمل ہوا ہے جس کے نتائج کل متوقع ہیں۔حالیہ دنوں میں ایران نے ایرانی کونسل کے عہدیداروں پر پابندی عائد کی تھی۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے