-,-کس طرح ایک غیر ملکی جاسوس کی بیٹی معروف پاکستانی کرکٹر کی بیوی بنی-,-

شوبز انڈسٹری ہو یا ماڈلنگ اور فیشن کی دنیا، ان سب سٹارز کا کرکٹ کے سٹارز سے بڑا گہرا تعلق رہا ہے، انڈین کرکٹر ویرات کوہلی نے اداکارہ انوشکا شرما سے شادی کی تھی، سابق انڈین کپتان اظہرالدین نے اپنی پہلی بیوی کو طلاق دیکر اداکارہ سنگیتا بجلانی سے شادی کی تھی جبکہ اور بھی بہت سارے کرکٹر ایسی حسن کی پریوں کو اپنا جیون ساتھی بنا چکے ہیں۔جبکہ 1983ملبورن آسٹریلیا میں پیدا ہونیوالی شنیرا تھامسن ایک نجی تقریب میں اپنے دوستوں کے ہمراہ شریک تھی، اچانک اسے اپنے عقب میں کسی کی موجودگی کا احساس ہوا، اس نے پلٹ کر دیکھا تو حیران رہ گئی، اس کے سامنے دنیائے کرکٹ کے عظیم پاکستانی بائولر سلطان آف سوئنگ وسیم اکرم کھڑے تھے۔ وسیم اکرم اپنے دوست کے ہمراہ میزبان کی دعوت پرجو کہ شنیرا کا بھی دوست تھا تقریب میں شریک تھے۔ وسیم اکرم پہلی ہی نظر میں اس بلی آنکھوں والی گوری شنیرا تھامسن کو دل دے بیٹھے تھے، بہانے سے اس کے قریب جا کر بات کرنے کا دل چاہا تو دل پر قابو نہ رکھ سکے۔ باتوں باتوں میں دونوں نے محسوس کیا کہ اس پہلی ملاقات میں دونوں بلا جھجک آسانی سےایک دوسرے سے بات کر رہے ہیں۔ وسیم اکرم نے شنیرا تھامسن سے اس سے رابطے کیلئے نمبر مانگ لیا اور موبائل کے ذریعہ بات چیت کا سلسلہ جاری رہا۔ ایک نہایت دلکش شام ملبورن پہنچنے پر وسیم نے شنیرا سے شادی کی خواہش کا اظہار کر دیا۔ پیشے کے اعتبار سے فلن تھراپسٹ اور ماہر تعلقات عامہ شنیرا تھامسن نے حیران کن جواب دیا۔ اس نے کہا کہ میری شادی کا فیصلہ میرے والدین کریں گے۔ وسیم اکرم حیران رہ گئے کہ ایک مغربی معاشرے میں رہنے والی خاتون اندر سے مشرقی نکلے گی اور اپنی شادی کا فیصلہ والدین کی رضامندی سے لینے کا اظہار کر دے گی۔ شنیرا کے والد مسٹر تھامسن پیشہ کے اعتبار سے جاسوس ہیں جو ایک پرائیویٹ ڈیٹیکٹو ایجنسی چلاتے ہیں۔ وسیم اکرم سے ملاقات کے بعد انہوں نے بیٹی کو بلا کر اس کے پسند کردہ شخص پر اعتماد کا اظہار کیا اور یوں شنیرا وسیم اکرم کی زندگی کی ساتھی بن گئی اور۔شنیراکی وسیم اکرم سے شادی اسلامی رسوم و رواج کے مطابق ہوئی۔معروف پاکستانی بلے باز اور مبلغ سعید انور نے شنیرا تھامسن کو کلمہ پڑھایا اور 12اگست کو لاہور میں ہونے والی رسم نکاح کی تقریب میں دونوں کا نکاح پڑھوایااور یوں شنیرا تھامسن شنیرا وسیم اکرم بن گئی۔ گزشتہ سال عید کے موقع پر ایک ٹی وی پروگرام سے خصوصی نشست کے دوران وسیم اکرم کے ہمراہ شنیرا بھی شریک ہوئیں۔ شنیرا نے نہایت دلچسپ بات بتاتے ہوئے کہا کہ1992کے ورلڈ کپ کے فائنل میچ جو کہ پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان کھیلا گیا تھا کے دوران میںصرف 7یا آٹھ برسکی تھی اور گھر پر موجود میچ سے لطف اندوز ہو رہی تھی۔ میں کسی ٹیم کی حمایت نہیں کر رہی تھی بلک چوکوں، چھکوں اور کھلاڑیوں کے آئوٹ ہونے کا مزہ لے رہی تھی، جب کوئی آئوٹ ہوتا تو میں ٹی وی سکرین کے سامنے اچھلنے لگ جاتی۔ مجھے نہیں پتا تھا کہجو شخص انگلینڈ کی وکٹوں کے پڑخچے اڑا رہا ہے کہ وہ کل میرا شوہر بن جائے گا۔ وسیم اکرم کی شنیرا سے یہ دوسری شادی ہے۔ ان کی پہلی شادی ایک ماہر نفیسات ہما سے ہوئی تھی جو بیماری کا شکار ہو کر انتقال کر گئیں۔ ہما سے وسیم اکرم کے دو بیٹے ہیں جبکہ گزشتہ سال شنیرا کے ہاں بھی ایک بیٹی کی ولادت ہوئی ہے۔ دونوں میاں بیوی اپنی ازدواجی زندگی سے خوش اور بچوں کے ہمراہ نہایت آرام سے زندگی گزار رہے ہیں۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے