۔،۔ کشمیریوں کے قتل عام کے باوجود عالمی ضمیرسو تارہا : سلمان پرویز۔،۔
بھارت سمیت اس کے حواریوں نے اسلام اور مسلمانوں کیخلاف تعصب،تشدد اورمنافقت کی انتہاکردی
میانمار،کشمیر اورفلسطین میں روزانہ بیگناہ مسلمان قتل ہوتے ہیں اورالٹا مسلمانوں کو دہشت گردکہا جاتا ہے

انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی سینئر نائب صدر سلمان پرویز نے کہا ہے کہ بھارت میں مسلمانوں سمیت کشمیریوں کے قتل عام پرآسمان روتاجبکہ بے حس عالمی ضمیرسو تارہا۔ بھارت سے مقتول مسلمانوں کے ساتھ ساتھ اقوام متحدہ کاجنازہ بھی اٹھ گیا کیونکہ نام نہاد یواین صرف مقتدرقوتوں کاترجمان اوران کے مفادات کا محافظ ہے۔اقوام متحدہ کی مجرمانہ خاموشی نے اس کی ساکھ کو راکھ کاڈھیر بنادیا ہے۔ بھارت سمیت اس کے حواریوں نے اسلام اور مسلمانوں کے معاملے میں تعصب،تشدد اورمنافقت کی انتہاکردی ہے۔ میانمار،کشمیر اورفلسطین میں روزانہ بیگناہ مسلمان قتل ہوتے ہیں اورالٹا مسلمانوں کو دہشت گردکہا جاتا ہے۔ اپنے ایک بیان میں سلمان پرویز نے مزید کہا کہ دین فطرت اسلام کی تعلیمات کوسمجھے بغیر انسانیت کے مقام اوراحترام کونہیں سمجھاجاسکتا۔ جس نے دین فطرت اسلام کی بنیادی تعلیمات کامطالعہ نہیں کیا وہ اس پر تنقیدکرنے کاحق نہیں رکھتا۔انہوں نے کہا کہ بھارت میں کشمیریوں سمیت مسلمان کاقتل عام مسلم حکمرانوں کی بزدلی،غیرمعمولی مصلحت پسندی اوراقتدارپرستی کاشاخسانہ ہیں۔مسلم حکمران ایک دوسرے کودبانے اورجھکانے کی بجائے شام،روہنگیا،فلسطین اورکشمیر کے مظلوم ومحکوم مسلمانوں کوبچانے کیلئے کچھ کیوں نہیں کرتے۔انہوں نے کہاکہ مسلم حکمران اپنے اپنے ملکوں میں پائے جانیوالے قدرتی وسائل کوعیش وعشرت اوراپنے محلات کی تعمیرات پرصرف کرنے کی بجائے آزادی کیلئے سربکف مسلمانوں کی مالی،اخلاقی اورسفارتی مددکریں۔اگرمسلم حکمران سچے دل سے متحداورمنظم ہوجائیں تووہ مقتدرقوتوں کواپنے روبرو گھٹنوں کے بل بٹھاسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ مسلمان ملکوں کواقوام متحدہ پرانحصارکرنے کی بجائے اپنے مفادات کی حفاظت کیلئے ایک منظم اورموثرادارہ بناناہوگا۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے