۔،۔انتخاب اوراحتساب سے بہترکوئی انقلاب نہیں: سلمان پرویز۔،۔
عوام کے پاس ووٹ کی طاقت سے تبدیلی کااختیار ہے مگر اس کے باوجود ہربار مینڈیٹ چوری کرلیا جاتا ہے
قومی وسائل کارخ عوام کی طرف موڑنے کی ضرورت ہے ورنہ ان کااحساس محرومی مزیدبڑھ جائے گا

انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی سینئر نائب صدر سلمان پرویز نے کہا ہے کہ انتخاب اوراحتساب سے بہترکوئی انقلاب نہیں۔اگر ملک میں آئینی تبدیلی ووٹ سے آ ئے گی تویقینا عوام کی حالت زاربھی ضروربدلے گی۔عوام کے پاس ووٹ کی طاقت سے تبدیلی کااختیار ہے مگر اس کے باوجود ہربار مینڈیٹ چوری کرلیا جاتا ہے۔ عوام ووٹ کی پرچی سے ناکارہ نمائندوں کی سیاست کے پرخچے اڑاتے ہیں،اسی کانام انقلاب اوراحتساب ہے۔قومی ضمیر کافیصلہ تسلیم نہ کر ناسیاست نہیں عداوت اور جہالت ہے۔پاکستان کسی مہم جوئی کامتحمل نہیں ہوسکتا،حکمران اتحاداورمتحدہ اپوزیشن دونوں فریق ملک میں قیام امن کیلئے ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کریں۔یہ جمہوری قوتوں کی حوصلہ افزائی کاوقت ہے، ملک میں معاشی استحکام جمہوریت کے تسلسل سے آئے گا۔اپنے ایک بیان میں سلمان پرویز نے مزید کہا کہ پاکستان اورپاکستانیوں کے روشن مستقبل کاراستہ جمہوریت اورقومی مفاہمت سے ہوکرجاتا ہے۔ عوام کسی سیاستدان کی دھونس سے ڈرنے والے نہیں،وہ ریاست،جمہوریت اورریاستی اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں۔انہوں نے کہا کہ سیاسی قائدین یادرکھیں ریلیوں اور دھرنوں سے کسی کاپیٹ بھرے گا اورنہ پرتشدداحتجاج سے انقلاب آتے ہیں۔پاکستان میں تعمیروترقی کے بغیر عام آدمی کامعیارزندگی بلندنہیں ہوگا۔انہوں نے کہا کہ قومی وسائل کارخ عوام کی طرف موڑنے کی ضرورت ہے ورنہ ان کااحساس محرومی مزیدبڑھ جائے گاجوہم برداشت نہیں کریں گے۔ عام آدمی کی ضروریات پرفوکس اورہوشربامہنگائی کوکنٹرول کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ اب کسی کوترقی کے دروازے بند نہ ملیں، کامیاب حکومت وہ ہے جس کی اصلاحات سے معاشرے کے تمام طبقات مستفید ہوں۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے