۔،۔ ون مین شو شعبدہ بازی ہے، ہم اس کامتحمل نہیں ہوسکتے: وسیم قریشی ۔،۔
احتساب کے ڈر سے نیب کونکیل ڈالناچوروں اوران کے سہولت کاروں کے بس کی بات نہیں

انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی سینئر نائب صدر اورممتازقانون دان مخدوم وسیم قریشی نے کہا ہے کہ پاکستان اقتدارنہیں اقدارکی سیاست سے ٹیک آف کرے گا۔اناپرست اورہٹ دھرم کپتان کی صورت میں ون مین شو خطرے سے خالی نہیں،ہماراملک اورمعاشرہ اس کامتحمل نہیں ہوسکتا۔ہمارے ہاں حکمران جماعت سمیت زیادہ ترسیاسی پارٹیوں میں ون مین شورائج ہے۔ دوہری شہریت والے اعلیٰ عہدیداروں کوقانونی کارروائی کاسامنا ہے جبکہ وزیراعظم عمران خان سمیت ان کے متعدد وزیروں اورمشیروں کے دوچہرے ہیں،جواندراورباہرسے مختلف ہوں ا نہیں دنیا کی کوئی طاقت ناکامی اوربدنامی نوشتہ سے نہیں بچاسکتی۔احتساب کے ڈر سے نیب کونکیل ڈالناچوروں اوران کے سہولت کاروں کے بس کی بات نہیں۔اپنے ایک بیان میں مخدوم وسیم قریشی نے مزید کہا کہ حکمران اورنیب زدگان یادرکھیں خالی صفائیاں اوردوہائیاں دینے سے داغداردامن صاف نہیں ہوتے۔جہاں بھی ون مین شو ہوگاوہاں شوزیادہ دیرتک نہیں چلتا۔انہوں نے کہا کہ درست اوردوررس اصلاحات اوران کے ثمرات کیلئے مشاورت کی اہمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔ عوام کوگمراہ کرنیوالے ان کے رہبر نہیں ہوسکتے،آئندہ انتخابات میں ان رہزنوں کوا یوانوں میں جانے سے روکناہوگا۔ جس کے پاس نوٹ ہیں وہ ووٹ کوبکاؤسمجھتا ہے،عوام گلی اورمحلے کی نالی بنوانے کیلئے اپنے ضمیرکاسودانہ کیا کریں۔انہوں نے کہا کہ اپنے بنیادی حقوق کی بازیابی عوام کے اپنے اختیار میں ہے،اس کیلئے انہیں افرادکی بجائے اداروں کی مضبوطی یقینی بناناہوگی۔جہاں ریاستی نظام درست ہوتا ہے وہاں کوئی طاقتورکسی کمزورکوانتقام کانشانہ نہیں بناسکتا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں رائج بدبودار نظام سے نجات کے بغیر عوام کوان کاکوئی بھی حق اورجائزاحترام نہیں ملے گا۔اگرملک توڑنے اوراس کے وسائل میں نقب لگانیوالے نظریہ ضرورت کے تحت آپس میں اتحاد کرسکتے ہیں توعوام نیا نظام نافذکرنے کیلئے متحدکیوں نہیں ہوسکتے۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے