۔،۔عدالت نے فرینکفرٹ کے کرفیو کی تصدیق کر دی،ہاٹ سپاٹ میں رابطے کی سخت پابندیاں۔نذر حسین۔،۔

شان پاکستان جرمنی فرینکفرٹ۔ 50 سے زیادہ کی اقدار کے حامل کورونا ہاٹ سپاٹ میں، مستقبل میں صرف زیادہ سے زیادہ دس افراد کو عوامی مقامات پر ملنے کی اجازت ہو نی چاہیئے، نئے اقدامات کے تحت کل بروز جمعرات 15 اکتوبر سے صرف پانچ افراد تک یا دو گھرانوں کے افراد کو عوامی جگہ پر ملنے کی اجازت ہو گی۔ خبر رساں ایجنسی ڈی۔پی۔اے۔ کے مطابق چانسلر انجیلا میرکل۔سی۔ڈی۔یو۔ اور وفاقی ریاستوں کے وزراء اعظم نے بدھ کے روز برلن میں اس بات پر اتفاق ظاہر کیا ہے جبکہ حتمی فیصلہ ابھی باقی ہے۔ ڈی۔پی۔اے سے موصول معلومات کے مطابق وفاقی اور ریاستی حکومتوں نے بھی اسی طرح کے ہاٹ سپاٹ کے ریستوران کے لئے رات 23:00 Uhr بجے سے صبح 06:00 Uhr بجے تک کرفیو نافذ کرنے پر اتفاق کیا ہے فرینکفرٹ میں پہلے سے ہی یہ قانون لاگو ہو چکا ہے تمام ریستوران رات گیارہ بجے سے صبح چھ بجے تک بند رہنے کا حکم جاری کر دیا گیا تھا،یہی بات ہاٹ سپاٹ میں میں مطلوبہ ماسک کی ضرورت پر بھی لاگو ہوتی ہے اگر حالات قابو سے باہررہے تو شاید اگلے دنوں میں ماسک ہر جگہ پر لازمی قرار دے دیا جائے گا۔ فرینکفرٹ کی انتظامی عدالت نے فرینکفرٹ میں (ریڈ الرٹ) نافذ کر دیا ہے۔جرمنی کے شہر کاسل Kassel میں بھی کورونا کیسز میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے، نئے آنے والے مہاجرین کے لئے ابتدائی استقبالیہ سہولت میں 301 رہائیشیوں کو قرنطینہ کیا گیا تھا منگل کے روز جب ٹیسٹ کیا گیا تو 111 افراد میں کورونا مثبت تھا جس کا اعلان بدھ کے روز کیا گیا۔میئر کے فوری اعلان کے مطابق شہر میں 250 سے زیادہ شرکاء کی تقریبات پر پابندی عائد کرتے ہوئے کہا گیا کہ 25 سے زایدہ افراد کے ساتھ تقریبات کی ممانعت ہو گی۔فرینکفرٹFrankfurt، مائن ٹاونس کلینک Main-Taunus-Kreis۔ ہوکسٹ کلینکFrankfurt-Höchst بادسودنBad Soden کی اسپتالوں ہوف ہائیمHofheim ایپسٹائن Eppsteinمیں مسلسل کوویڈCovid انفکشن کے پیش نظر تمام کلینک اور بزرگ شہریوں کی رہائش گاہ میں ملنا جلنا بروز جمعرات بتاریخ 15. اکتوبر سے بند کر دیا جائے صرف ہنگامی حالات میں رشتہ داروں کو ملنے کی اجازت دی جائے گی،خصوصی طور پر فالج کے مریضوں سے اور حاملہ خواتین سے ملنے کی اجازت صرف ایک شخص تک محدود کر دی گئی ہے۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے