۔،۔ سٹوڈنٹس نے تحریک انصاف جرمنی کے سینئر رہنماتوقیر بُٹر صابری کے ساتھ قائد اعظم ڈے منایا۔،۔
تو نے اس باغ کو سینچا ہے لہو سے اپنے
تیری خوشبو سے تیرا باغ ہمیشہ مہکے

شان پاکستان جرمنی ساربروکن۔ تحریک انصاف جرمنی کے سینئر رہنماتوقیر بُٹر صابری نے شان پاکستان سے بات کرتے ہوئے کہا کہ چند سٹوڈنٹس قائد اعظم ڈے منانے میرے گھر تشریف لائے کورونا احتیاط کو مد نظر رکھتے ہوئے چار سٹوڈنٹس کو آنے کی اجازت دی توقیر بٹر کا کہنا تھا کہ ان کا گھر چاروں طرف سے جرمن باشندوں کے اندر گھرا ہوا ہے اس لئے احتیاط ضروری ہے مختصراََ یہ کہ سارلینڈ یونیورسٹی (سار۔یونیSaar-Uni یا یو ڈی ایس UdS چھدم لاطینی نام ہے۔pseudo-Latin۔یونیور سیٹاس سرویینسسUniversitas Saraviensisواحد سار لینڈ یونیورسٹی ہے جو سار بروکن اور ہیمبرگ میں ہے کے سوڈنٹس قائد اعظمؒ کا یوم ولادت منانا چاہتے تھے اسی سلسلہ میں وہ میرے پاس تشریف لائے مجھے اس بات کی خوشی ہے کہ انہوں نے مجھے عزت بخشی دوسرا اس بات کی خوشی ہے کہ پاکستانی طلباء اپنی تاریخ سے وابسطہ ہیں،سٹونڈنٹس کا کہنا تھا کہ کوئی بھی زمینی طاقت قائد اعظم محمد علی جناح ؒ کو خرید نہ سکی،ان کا کہنا تھا کہ بیسوی صدی کا سب سے بڑا انسان قائد اعظم محمد علی جناحؒ تھا،توقیر بٹر صابری کا کہنا تھا کہ قائد کا فرمان ہے کہ علم تلوار سے بھی زیادہ طاقتور ہے اس لئے علم کو اپنے ملک میں بڑھائیں کوئی آپ کو شکست نہیں دے سکتا۔آخر میں ان کا کہنا تھا کہ قائد اعظم محمد علی جناحؒ آسمان سیاست ہند کا وہ روشن شتارہ ہے جو بر صغیر پر بہتر (72)سال تک طلوع رہا جس کی روشن کرنیں آج بھی پاکستان کی صورت میں اس عالم کو منور کر رہی ہیں۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے