۔،۔ مشہور و معروف براڈکاسٹر کنول نصیر انتقال کر گئیں۔اِنَا لِلّہِ وَ اِنَا اِلَیہِ رَاجِعُونَ۔۔ نذر حسین۔،۔

کنول نصیر پانچ دہائیوں تک پی ٹی وی اور ریڈیو پاکستان سے وابستہ رہیں۔

شان پاکستان اسلام آباد۔ پاکستان ٹیلی ویثرن کی پہلی خاتون اناوُنسر، ڈرامہ آرٹسٹ کنول نصیر زندگی کی 73 بہاریں دیکھنے کے بعدانتقال کر گئیں،لیجنڈڈ ریڈیو اور ٹی وی آرٹسٹ اور نامور براڈکاسٹر کنول نصیر جمعرات 25 مارچ 2021کو اسلام آباد میں مختصر علالت کے بعد انتقال کر گئیں ان کی عمر 73 سال تھی۔ریڈیو پاکستان کی خبر کے مطابق 1948میں لاہور میں پیدا ہونے والی کنول نصیر اپنے ساتھ کچھ خاص قسمت و مقدر لے کر پیدا ہوئی، 17 سال کی عمر میں ہی میڈیا سے وابسطہ ہو گئی اور پھر پانچ دہائیوں تک پی ٹی وی اور ریڈیو پاکستان سے وابسطہ رہی۔ وہ پہلی اینکر، پہلی خاتون نیوز کاسٹر اور پاکستان پیلی ویثرن کی پہلی خاتون اناونسر تھیں۔ کنول نصیر نے اپنا پہلا اعلان 26 نومبر 1964بروز جمعرات کو پی ٹی وی (PTV) لاہورمیں کیا تھا ان کی خدمت کے اعتراف میں انہیں پرائیڈ آف پرفارمنسPride of Performance مور متعدد قومی ایوارڈز سے نوازا گیا ہے۔ ٭کنول نصیر لیجنڈ اداکار موہنی حمید(آپا شمیم)کی بیٹی اور پی ٹی آئی کے سکریٹری اطلاعت احمد جواد کی ساس تھیں۔ واضح رہے ان دنوں پی ٹی وی ریڈیو پاکستان کے احاطے میں ایک چھوٹے سے کمرے میں تھا۔ اس اسٹیشن کا افتتاح اس وقت کے صدر ایوب نے کیا تھااور پہلی انائونسمنٹ طارق عزیز نے کی۔ پاکستان ٹیلی ویژن کے پہلے کیمرا مین انیس احمد ہیں جبکہ پہلا گانا طفیل نیازی نے گایا- اس گانے کی موسیقی میوزک امیر حیدری نے ترتیب دی تھی-

٭اس وقت کے صدر پاکستان جنرل ایوب خان پی ٹی وی سینٹر کا افتتاح کرتے ہوئے٭

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے