-,- اسٹیٹ بنک آئی ایم ایف کے سپردکرناجائز نہیں:محمدجمیل گوندل-,-
نااہل تبدیلی سرکار نے قوم پربیرونی قرض اورسود کا بوجھ مزید بڑھادیا

انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ نیویارک کے صدر محمدجمیل گوندل نے کہا ہے کہ اسٹیٹ بنک آئی ایم ایف کے سپردکرناجائز نہیں۔اگر حکمران نااہل ہیں تواس کامطلب یہ نہیں قومی ادارے بیرونی قوتوں کی دسترس میں دے دیں۔ عوام عالمی مالیاتی اداروں کے رحم وکرم پر ہیں،عوام اپنے اسٹیٹ بنک سے دستبردارنہیں ہوں گے۔وہ کپتان جوکنٹینر پرکھڑے ہوکر آئی ایم ایف اورورلڈبنک کے پاس جانے کی بجائے خودکشی کرنے کادعویٰ کیا کرتا تھا آج اس کے کشکول کاحجم اس کے پیشرووزرائے اعظم سے کئی گنا بڑا ہے۔نااہل تبدیلی سرکار نے قوم پربیرونی قرض اورسود کا بوجھ مزید بڑھادیا۔اپنے ایک بیان میں محمدجمیل گوندل نے مزید کہا کہ حکمران قرض اتارنے کیلئے قومی وسائل پیداکرنے میں ناکام رہے۔ریاست مدینہ ثانی میں سود پرقرض کاحصول ایک بڑاسوالیہ نشان ہے۔انہوں نے کہا کہ جس ملک کی معیشت میں سود شامل ہوگاوہاں برکت کہاں سے آئے گی۔ نااہل حکومت اورناکام اپوزیشن ایک دوسرے کے پیچھے چھپ رہے ہیں۔دونوں دھڑوں نے اپنے اپنے نجی سیاسی مفادات کیلئے قومی مفادات کوبلڈوز کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی۔انہوں نے کہا کہ دونوں کے بیانات اوراقدامات نے عوام کو بری طرح مایوس کردیا۔تبدیلی سرکار اورجیالی سرکار والے عوام کی چیخوں اورآہوں کوسننے اوران کی اشک شوئی کرنے کیلئے تیار نہیں۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں نے معاشی چیلنجز کامقابلہ کرنے کیلئے اپنی مراعات میں کمی کی بجائے سارابوجھ بیچارے عوام پرڈال دیا۔ مقروض ملک کے حکمرانو ں کوہوشربا مراعات سے مستفید ہورہے ہیں،ان کیلئے شرم سے ڈوب مرنے کامقام ہے۔انہوں نے کہا کہ جس کپتان کاوزیراعظم منتخب ہونے سے پہلے اپنے وسائل پر گزارہ ہورہا تھالیکن اب اسے تنخواہ کی مدمیں دولاکھ میں کم کیوں پڑرہے ہیں۔ اگر حکمران نجات دہندہ ہوتے تومراعات کی وصولی سے انکارکردیتے۔

ایڈیٹرچیف نذر حسین کی زیر نگرانی آپ کی خدمت میں پیش ہے