۔،۔ اتحادویکجہتی اوراخوت کافروغ وقت کی ضرورت ہے:جمیل رمضان رضی۔،۔
پاکستان میں جمہوریت کی آڑ میں جمہورکابدترین استحصال کیاجاتا ہے

تحریک دفاع پاکستان کے مرکزی چیئرمین جمیل رمضان خان رضی نے کہا ہے کہ دفاعی ادارے پاکستان کی سا لمیت پرآنچ نہیں آنے دیں گے۔کسی کرکٹ ٹیم کے آنے یا میدان چھوڑ کربھاگ جانے سے پاکستان کی صحت پرکوئی اثر نہیں پڑے گا۔بھارت کی منافقت اوربزدلی ایک بار پھر بے نقاب ہوگئی۔نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کوہراساں کرنے کے معاملے میں بھی بھارت ملوث ہے۔مودی سرکار دنیا کیلئے ناسور کے سوا کچھ نہیں۔اپنے ایک بیان میں جمیل رمضان خان رضی نے مزید کہا کہ اتحادویکجہتی اوراخوت کافروغ وقت کی اہم ضرورت ہے۔یہ اختلافات میں پڑنے اورآپس میں الجھنے کاوقت نہیں، ملک دشمن سازشوں کوناکام بنانے کیلئے ایک دوسرے کاہاتھ تھام لیاجائے۔انہوں نے کہا کہ مختلف طبقات سے تعلق رکھنے والے افراد وسعت قلبی اور باہمی رواداری کامظاہرہ کریں۔ نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے فراراورانگلینڈ ٹیم کے انکار سے ان دونوں ملکوں کاقد چھوٹا ہوا، پاکستانیوں کاغم وغصہ فطری ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کاوقار ان دوٹیموں کامرہون منت نہیں جوان کے جانے اورنہ آنے سے خطرے میں پڑ جائے گا۔ اقوام متحدہ کے ضابطہ اخلاق کی روشنی میں پاکستان کی داخلی خودمختاری اورحاکمیت اعلیٰ کااحترام یقینی بنایاجائے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان دنیا کی نام نہاد سپرپاورامریکا سے زیادہ محفوظ ہے۔ کرکٹ محض ایک کھیل ہے، اپوزیشن والے صورتحال کی سنگینی کاادراک کئے بغیر غیرسنجیدہ بیان بازی میں مصروف ہیں۔