۔،۔26 جنوری کوفرینکفرٹ میں ہندوستانی قونصلیٹ کے سامنے سکھ تنظیمیں یوم سیاہ منائیں گی۔ نذر حسین۔،۔

٭یہ دن سکھ کمیونٹی،کشمیری کمیونٹی اور دلتوں کے لئے یوم سیاہ کی طرح منایا جاتا ہے،بھارتی حکومت دہشت گرد ہے،بھارتی حکومت انسانی حقوق کو پامال کرتی چلی آ رہی ہے۔وہ سکھ جو سیاسی قیدی ہیں جو کئی سالوں سے اپنی سزا کاٹ چکے ہیں لیکن پھر بھی رہا نہیں ہوئے، ان کی آزادی،کشمیریوں کی آزادی اور خالستان کی آزادی امن کا واحد حل ہے ٭

شان پاکستان جرمنی فرینکفرٹ۔ یہ دن سکھ کمیونٹی،کشمیری کمیونٹی اور دلتوں کے لئے یوم سیاہ کی طرح منایا جاتا ہے،بھارتی حکومت دہشت گرد ہے،بھارتی حکومت انسانی حقوق کو پامال کرتی چلی آ رہی ہے۔وہ سکھ جو سیاسی قیدی ہیں جو کئی سالوں سے اپنی سزا کاٹ چکے ہیں لیکن پھر بھی رہا نہیں ہوئے، ان کی آزادی،کشمیریوں کی آزادی اور خالستان کی آزادی امن کاواحد حل ہے، اسی بات کو مدنظر رکھتے ہوئے جرمن گردوارہ کی انتظامی کمیٹیوں، سکھ تنظیموں اور انسانی حقوق کے حامیوں کا بھارتی حکومت کی طرف سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف (چھبیس) جنوری کو پر امن احتجاج کیا جائے گا، خصوصی طور پر ان قیدیوں کی یاد میں بھی جو سیاسی قیدی تھے اور کئی سالوں سے اپنی سزا کاٹ چکے ہیں لیکن پھر بھی ان کو رہا نہیں کیا گیا۔ آئیں ہماری آواز بنیں، کشمیریوں،سکھوں اور دلتوں کی رہائی کے لئے اکٹھے ہو کر بھارتی دہشت گردوں تک اپنی آواز پہنچائیں۔ چلو چلو انڈین قونصلیٹ چلو۔