۔،۔ جرمنی کیل سے ہیمبرگ جانے والی ٹرین میں مسلح شخص نے چاقو سے وار کر کے دو افراد کو ہلاک کر دیا۔نذر حسین۔،۔

٭جرمنی کے شہر کیل سے ہیمبرگ جانے والی ریجنل ٹرین پر چاقو سے حملے میں دو افراد ہلاک اور سات زخمی ہو گئے،یہ حملہ جرمنی کی شمالی ریاست (شلیسوگ ہولسٹائین) میں ہوا جس کی سرحد ڈنمارک سے ملتی ہے۔(تینتیس) سالہ حملہ آور گرفتار ٭

شان پاکستان جرمنی فرینکفرٹ/ (شلیسوگ ہولسٹائین)/ہیمبرگ/کیل۔جرمنی کے شہر کیل سے ہیمبرگ جانے والی ریجنل ٹرین پر چاقو سے حملے میں دو افراد ہلاک اور سات زخمی ہو گئے،یہ حملہ جرمنی کی شمالی ریاست (شلیسوگ ہولسٹائین) کے گاوں بروکسٹڈ میں ہوا جس کی سرحد ڈنمارک سے ملتی ہے۔(تینتیس) سالہ حملہ آور گرفتار جس کا تعلق فلسطین سے بتایا جا رہا ہے۔ یہ واقعہ بدھ (پچیس) جنوری کو اس وقت پیش آیا جب جرمنی کے شہر کیل سے ہیمبرگ جانے والی ریجنل ٹرین پر نامعلوم وجوعات کی بنا پر(تینتیس) سالہ حملہ آور نے مسافروں پر چاقو سے حملہ کر دیا رپورٹ کے مطابق دو افراد موقع پر ہلاک ہو گئے جبکہ سات زخمی ہو گئے جن میں سے تین کو شدید زخم ہیں چار کو معمولی زخم آئے ہیں۔ٹرین میں سوار تین مسافروں نے بالآخر مشتبہ حملہ آور پر قابو پا لیا جس کو پولیس نے موقع پر پہنچ کر حراست میں لے لیا، ایک اطلاح کے مطابق ریل گاڑی میں تقریباََ (ستر کے لگ بھگ) مسافر سوار تھے جس کی وجہ سے پولیس کو متعدد ایمرجنسی کال آئیں یہی وجہ تھی کہ پولیس فوراََ جائے وقوعہ پر پونچ گئی۔ خبر کی اطلاع ملتے ہی ریاست شلیسوگ ہولسٹائین کی وزیر داخلہ٭ سابین شٹرلن واک ٭جائے وقوعہ پر پہنچ گئیں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے یتایا کہ مشتبہ شخص فلسطینی علاقوں سے تعلق رکھنے والا ایک بے وطن شخص ہے۔وفاقی وزیر داخلہ نینسی فیسر نے ٹویٹر پر لکھا۔ ہماری تمام ہمدردیاں متاثرہ خاندانوں اور مقتولین کے پیاروں کے ساتھ ہیں۔ واضح رہے جرمنی میں حالیہ برسوں میں چاقو سے متعدد مہلک حملوں کے واقعات رونما ہوئے ہیں جبکہ بعض حملے انتہا پسندوں اور بعض شدید نفسیاتی مسائل سے دوچار افرا نے کئے ہیں۔جرمنی کی ایک عدالت نے گذشتہ دسمبر میں ایک شامی نثراد شخص کو پرین میں چاقو سے حملہ کرنے کی پاداشت میں (چودہ) سال قید سنائی تھی۔ دو سال پہلے جرمنی کے شہر ورز برگ میں تین افراد کو چاقو کے وار سے ہلاک کرنے پر ایک صومالی شخص کو نفسیاتی اسپتال میں منتقل کرنے کا حکم جاری کیا تھا۔